Lecture Maulna Naqi Askari sb

مجلس علماءہند کے زیر اہتمام جاری ہفتہ وار دینی کلاسیز کے دوسرے کلاس میں ” اجتہاد و تقلید کی ضرورت اور اخباریت کی حقیقت “ کے موضوع پر درس دیتے ہوئے مولانا سید نقی عسکری نے کہاکہ دین کے احکامات کو صحیح طریقے سے سمجھ کر عمل کرنے کی اسلام میں دعوت دی گئی ہے ۔اندھی تقلید کرنا اسلام میں جرم ہے ۔عقل و منطق کی بنیاد پر ہر مسئلے کو سمجھنا ضروری ہے ۔مولانا نے کہا کہ دین کوو ہی صحیح طریقے سے سمجھا سکتاہے جس نے خود دین کو صحیح طریقے سے سمجھا ہوگا اور یہ کام فقیہ سے بہتر کوئی انجام نہیں دے سکتاہے ۔مولانا نے مزید کہا کہ اجتہادو تقلید کا مسئلہ اس وقت بڑی اہمیت اختیار کرگیاہے اسکی بڑی وجہ اخباری افکار کا زوال بھی ہے ۔نوجوان اجتہاد کی اہمیت اور تقلید کی ضرورت کو سمجھ رہے ہیں ۔مولانا نے نوجوانوں کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملا امین استرآبادی اخباری مسلک کے بانی ہیں ۔یہ لوگ عقل کو حجت نہیں مانتے ہیں بلکہ قرآن کریم کی حجیت کا بھی اس بہانے انکار کردیتے ہیں کہ قرآن کو صحیح طریقے سے سمجھنا اولیاءاللہ کی خصوصیت ہے لہذا ہمارا فرض یہ ہے کہ صرف احادیث کی طرف رجوع کریں ۔وہ ادلہ ¿ اربعہ میں صرف سنت کو حجت تسلیم کرتے ہیں ۔یہی وجہ ہے کہ یہ لوگ کتب اربعہ کی حدیث کو صحیح اور قطعی الثبوت مانتے ہیں ۔علماءنے بڑی علمی و فکری جد و جہد کے بعد انکے نظریات کی توبیخ کی اور اب یہ مسلک صرف نعرہ بازی تک محدود ہے یعنی جو اخباری ہے وہ بھی اخباریت کی حقیقت اور اسکی تاریخ سے نابلد ہے ۔مولانا نے کہاکہ فقیہ کے فتوﺅں میں اسکی علمیت کے ساتھ مطالعہ ¿ کائنات کا اثر بھی ہوتاہے ۔جس موضوع کے متعلق مجتہد فتوی دیتاہے اسکے متعلق اسکی پوری تحقیق ہوتی ہے۔مولانا نے جوانوں کو اجتہاد کا مطلب سمجھاتے ہوئے کہاکہ اجتہاد کا مطلب دینی امور میں بصیرت پید اکرنااور انکے متعلق فیصلہ کرنے کی صلاحیت حاصل کرنا ہے لیکن ہمارے نقطہ ¿ نظر سے دینی امور میں بصیرت پیدا کرنے کی دوقسمیں ہیں ایک مشروع ہے اور دوسری قسم ممنوع ہے ۔اسی طرح تقلید کی بھی دوقسمیں ہیں ایک مشروع اوردوسری ممنوع ۔مولانا نے تفصیل کے ساتھ ان اقسام کی وضاحت کی اور درس کے دوروان نوجوانوں کے سوالات کے جوابات بھی دیے ۔
دوسرا درس مولانا اصطفیٰ رضا نے ” توحید شناسی ‘ ‘ کے موضوع پر دیا ۔مولانا نے فطرت کے آئینہ میں توحید کی معرفت پر تفصیلی گفتگو کی اور ان وجوہات کا بیان بھی کیا جنکی بنیاد پر آجکا نوجوان طبقہ خدا بیزار اور مذہب سے دور ہوتا جارہاہے

Related Images